تازہ ترین

سیکشن:دھنک



وہ باورچی خانے میں جاتی تو اٹھا پٹک کی آوازیں شروع ہوجاتیں

وہ مصالحہ پیستے ہوئے سوچتی کہ سل بٹہ شوہر کو مشورہ دینے والوں کے سر پر دے مارے- - - - - - - - - - - - - - -زینت شکیل ۔ جدہ وہ باورچی خانہ میں داخل ہوتی اور اٹھا پٹک کی آوازیں باورچی خانہ سے باہر...

’’وقت‘‘،خراماں خراماں جانبِ ابد رواں

وہ سوچتیں کہ آئینہ جھوٹ بول رہا ہے جیسے امی کی سلائی کی مشین کے پہئے میں مجھے منہ بگڑا نظر آتا تھاتسنیم امجد ۔ ریاضیہ حقیقت ہے کہ وقت ہمیشہ سے بے وفا ہے وہ کبھی کسی کے لئے نہیں رکتا، خراماں خراماں...

گمراہی سے روشنی تک سفر کیلئے درکار ایک ساعت

دنیا کے بڑے کاروباری ذہن نے جو مادی اشیاء کی صورت میں لغویات کی بھرمار کی ہے، وہ یہ منظر دیکھ کر خوش ہورہے ہیں کہ ساری دنیا ہر طرف سے بے خبر رہ کر الیکٹرانکس کی دنیا میں گم ہےاُم مزمل ۔ جدہ وہ اپنی...

کتاب اور طالب علم ،جیسے روح اورجسم

کتاب ہماری تنہائی کی ساتھی ہے، روشنی کی کرن بن کر ڈھارس بندھاتی ہے،انسان اور کتاب کا رشتہ انتہائی قدیم ہے جتنا انسانی تہذیب و تمدن کا سفر  عنبرین فیض احمد ۔ ریاضکسی مفکر کا قول ہے کہ اگر...

آن لائن سے لائبریریوں تک واپسی ناممکن نہیں

کتاب مرقوم علم ہے ، قرطاس پر متر شح دانائی ہے ، الفاظ میں سمٹی آگہی ہے - - - - - - - - - - - - - - - - -تسنیم امجد۔ ریاض کتاب اورانسان کا رشتہ بہت قدیم ہے ۔ کتاب آج بھی ہر عمر کے لوگوں کی سہیلی...

کاشانۂ بابل کے آسمان کا ٹوٹا ہواتارہ’’نجمہ‘‘

حُسن جب ہر وقت سامنے ہو تا ہے تو نگاہوں میں سما جاتا ہے اور اپنی اہمیت کھو دیتا ہےپھر گل و بلبل داستانِ عشق نہیں دہراتے بلکہ گل اپنی چاک دامانی پہ شاکی ہوتا ہے تو بلبل اپنی بے سروسامانی کا رونا...

ماضی: ’’جی سے جی ، حال: ٹیکنالوجی سے ٹیکنالوجی

بے راہ روی، بدتہذیبی، بے صبری اورفحاشی جیسی ’’چکا چوند‘‘ اسی ترقی کی عطا ہے جو ہمارے ضمیر کومیٹھی لوریاں دے کر گہری نیند سلانے میں کامیاب ہوتی جا رہی ہےنفیسہ زبیر۔ جدہ آج کے...

میکا:بیٹی کی رخصتی کے بعدسُونا ہونے والا ’’کاشانۂ بلبل‘‘

بیٹیوں کو بچپن سے ہی یہ سبق پڑھانا شروع نہیں کر دینا چاہئے کہ وہ پرایا دھن ہیں ، ایسے اسباق سے ان کا معصوم ذہن الجھ کر رہ جاتا ہے۔عنبرین فیض احمد ۔ ریاض بیٹیاں آکاس بیل کی طرح پوران چڑھتی ہیں اور...

’’خواب ہوتے ہیں دیکھنے کیلئے ‘‘

بدقسمتی یہ ہے کہ ہم ایسی نہج پر گامزن ہوچکے ہیں جو کسی طور بھی ہمارے اسلاف کی روایات سے میل نہیں کھاتیتسنیم امجد ۔ ریاضسنا ہے کہ حقوق کی جنگ میں خواتین فتح یاب ہیں اور اب روشن خیالی ان کی زندگی کا...

کرنے چلی تھی ہمسری صنفِ قوی کے ساتھ

 - - - - - - - - - - - - - - - - - - -  - - - - - - - - - - - - - - - - - - - - - - - - - --  - -- - - - - - - - - - -شہزاد اعظم۔جدہ کرنے چلی تھی ہمسری صنفِ قوی کے ساتھجب گِر پڑی تو...

الصفحات